فیصل آباد: مالکن کے مبینہ تشدد سے گھریلو ملازمہ کی موت 29

فیصل آباد: مالکن کے مبینہ تشدد سے گھریلو ملازمہ کی موت

فیصل آباد : تمام ترحکومتی اقدامات کے باوجود پنجاب میں گھریلو ملازمین پر تشدد کے واقعات نہ تھم سکے، فیصل آباد میں پیش آنے واقعے میں ایک اور گھریلو ملازمہ مبینہ تشدد کے باعث زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھی۔ تفصیلات کے مطابق واقعہ فیصل آباد کے علاقے ایوب کالونی میں پیش آیا ہے، جہاں جڑانوالہ سے تعلق رکھنے والی گھریلو ملازمہ سائرہ کی پر اسرار موت ہوئی ہے۔

پندرہ سالہ سائرہ کی والدہ شمیم نے الزام عائد کیا ہے کہ میری بیٹی گذشتہ سات ماہ سے یہاں کام کررہی تھی، اسے ماہانہ ساڑھے آٹھ ہزار روپے ملتے تھے، کام کے دوران مالکن علیزہ بیٹی پر تشدد کرتی تھی، مالکن کے تشدد سے میری بیٹی جاں بحق ہوئی۔ مقتول کی والدہ نے میڈیا کو بتایا کہ مالکن علیزہ نے بخار سے سائرہ کی موت کا ڈرامہ رچایا، ہم گھر پہنچے تو سائرہ کی پھندا لگی لاش ملی، میری وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار سے اپیل ہے کہ ہمیں انصاف دلایا جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں