پی سی بی نے ڈومیسٹک سیزن22-2021 کے شیڈول کا اعلان کر دیا 22

پی سی بی نے ڈومیسٹک سیزن22-2021 کے شیڈول کا اعلان کر دیا

اسلام آباد : پاکستان کرکٹ بورڈ نے ڈومیسٹک سیز 22-2021کے شیڈول کا اعلان کر دیا ہے، یہ سیزن دس ٹورنامنٹس پرمشتمل ہو گا جس میں 266 میچز کھیلیں جائیں گئے۔

پی سی بی کےڈومیسٹک سیزن 21-2020 کےنو ٹورنامنٹس میں220میچز کھیلے گئے تھے، پاکستان کرکٹ بورڈ کوڈومیسٹک سیزن کامیابی کے ساتھ مکمل کرنے والے واحد بورڈ کا اعزاز بھی حاصل ہے۔

پی سی بی کا ڈومیسٹک سیزن 22-2021 پاکستان کی میزبانی میں کھیلے جانے والے بین الاقوامی میچز سے مکمل طور پر الگ حیثیت رکھتا ہے، ستمبر 2021 سے مارچ 2022 کے درمیان پاکستان، نیوزی لینڈ،انگلینڈ،ویسٹ انڈیز اور آسڑیلیا کی میزبانی کرے گا اس دوران ایچ بی ایل پاکستان سپر لیگ بھی منعقد ہو گی۔دو روزہ سی سی اے ٹورنامنٹ کے میچز ڈومیسٹک سیزن22-2021 میں شامل نہیں ہیں،

دو روزہ سی سی اے ٹورنامنٹ 16 جولائی کو شروع ہوا اور 22 اگست کو اختتام پذیر ہوگا۔ 90 سٹی کرکٹ ایسوسی ایشنز اس ٹورنامنٹ میں حصہ لے رہی ہیں ۔سی سی اے ٹورنامنٹ شاندار کارکردگی پیش کرنے والے کھلاڑیوں کو آگے بڑھنے کا موقع فراہم کر رہا ہے،

اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے کھلاڑیوں کو پی سی بی کے ڈومیسٹک سیزن 22-2021 میں کھیلنے کا موقع ملے گا۔ آئندہ سیزن میں پاتھ ویز کرکٹ کے لیے اضافی میچز شامل کئے گئے ہیں جس کے لیے پی سی بی نے چھ کرکٹ ایسوسی ایشنز کو اجازت دی ہے وہ انڈ ر 16 اور انڈر 19 کے لئے دو ٹیمیں شامل کر سکتی ہیں۔

نیشنل انڈر 19 تین روزہ چیمپئن شپ میں 12 ٹیمیں میچز میں حصہ لیں گی اور ایک روزہ کپ تین اکتوبر سے 12 نومبر تک گوجرنوالہ، اسلام آباد، مرید کے ،راولپنڈی اور سیالکوٹ میں کھیلا جائے گا، مزید 12 ٹیمیں نیشنل انڈر 16 کپ میں 8 سے 19 مارچ تک 31 میچ کھیلیں گی

۔راولپنڈی سنگل لیگ مقابلوں کی میزبانی کر ے گا۔کوویڈ 19 وبائی مرض کی وجہ سے ایک سال کے وقفے کے بعد قومی انڈر 13 ون ڈے کپ بھی قومی سرکٹ میں واپس آگیا ہے۔

یہ سنگل لیگ ایونٹ فیصل آباد میں 8 سے 18 فروری 2022 کو منعقد ہوگا۔ڈائریکٹر ہائی پرفارمنس ندیم خان کا کہنا ہے سیزن 22-2021ایج گروپ کرکٹ کے سیزن کے لئے ہر کرکٹ ایسوسی ایشن کو دو U16 اور U19 ٹیمیں میدان میں اتارنے کی اجازت دی جائے گی تاکہ ہم بنیادی سطح پر کھلاڑیوں کے پول کو بڑھا سکیں جس سے مستقبل کے کھلاڑیوں کو فائدہ حاصل ہو گا۔

ندیم خان کا مزید کہنا ہے کہ یہ حکمت عملی کرکٹ ایسوسی ایشنز کی منصوبہ بندی کے مطابق ہے جو کلبوں ، سکولوں اور یونیورسٹیوں کے بہترین کھلاڑیوں کو قومی ٹورنامنٹس میں اپنی صلاحیتوں کے اظہار کے مواقع فراہم کرتی ہے۔انہو ں نے کہا انڈر 16 اور انڈر 19 مقابلوں میں کھلاڑیوں کو وہی ماحول فراہم کیا جائے گا جیسا کہ سینئر کرکٹ میں ہوتا ہے یہ عمل پیشہ ورانہ کرکٹرز کی حیثیت سے ان کی مجموعی ترقی میں معاون ثابت ہوگا۔

سیزن 22-2021 پندرہ ستمبر کو آٹھ روزہ کرکٹ ایسوسی ایشن ٹی 20 ٹورنامنٹ کے ساتھ شروع ہوگا جس میں چھ سکینڈ الیون کرکٹ ایسوسی ایشنز کی ٹیمیں کوئٹہ میں مدمقابل ہونگی۔نیشنل ٹی 20 کپ ملک کے بہترین مختصر فارمیٹ کے کھلاڑیوں پر مشتمل ہے جو25 ستمبر سے 13 اکتوبر تک منعقد ہوگا۔

پہلے راؤنڈ کے اٹھارہ میچ ملتان میں ہوں گے جبکہ باقی پندرہ میچز لاہور میں منعقد ہونگے جن میں دو سیمی فائنل اور فائنل بھی شامل ہیں ۔پاکستان کا ڈومیسٹک ایونٹ قائداعظم ٹرافی 20 اکتوبر سے شروع ہوگا۔ 10 راؤنڈ سنگل لیگ کے پہلے نصف مقابلے ملتان ،

فیصل آباد اور لاہور میں ہوں گے۔ اس کے بعد ایونٹ کراچی منتقل ہو جائے گا جہاں 29 دسمبر سے پانچ روزہ فائنل کا اختتام ہوگا۔سیکنڈ الیون کے لیے تین روزہ ڈبل لیگ کرکٹ ایسوسی ایشن چیمپئن شپ 28 ستمبر سے 14 نومبر تک ہوگی جبکہ 50 اوور کی سنگل لیگ کرکٹ ایسوسی ایشن چیلنج سیکنڈ الیون 19 سے 27 نومبر تک کھیلی جائے گی۔

دونوں ٹورنامنٹ فیصل آباد ، لاہور اور شیخوپورہ میں ہوں گے۔22-2021 کے سیزن کا اختتام 30 مارچ کولاہورمیں ایک روزہ پاکستان کپ کے فائنل کے ساتھ ہو گا۔25 فروری سے شروع ہونے والا ٹورنامنٹ ڈبل لیگ کی بنیاد پر کھیلا جائے گا۔ایونٹ کے باقی دو وینیوز فیصل آباد اور ملتان ہوں گے۔

ندیم خان کا اس موقع پر کہنا ہے کہ ہم معیار پر مبنی کرکٹ سیزن منعقد کرنے لیے بہت پرجوش ہیں جو نہ صرف پیشہ ور کرکٹرز کی مہارت ، تکنیک اور فٹنس کی جانچ کرے گا بلکہ سلیکٹرز اور کوچز کو قومی فریم ورک میں شامل کرنے کے لیے بہترین کارکردگی دکھانے والوں کی شناخت کرنے میں مدد فراہم کرے گا۔

ان کا مزید کہنا ہے یہ سیزن پچھلے سیزن کی طرح مشکل ہوگا جو کھلاڑیوں کو بھرپور طریقے سے پرکھے گا لیکن یہ بالکل اُسی طرح ہے جیسا ہم چاہتے ہیں۔ ہم دیکھنا چاہتے ہیں کہ ہمارا نظام ذہنی اور جسمانی طور پر ایسے سخت کھلاڑی پیدا کرتا ہے جوہر طرح کے حالات میں کسی بھی ٹیم کے خلاف کارکردگی پیش کر سکتے ہیں۔

فرسٹ الیون کے زیادہ تر میچوں کو ٹیلی ویژن اور ڈیجیٹل براڈ کاسٹ کی سہولت فراہم کی جائے گی۔ندیم خان نے کہا پچھلے سیزن کی طرح پی سی بی نہ صرف ان کھلاڑیوں کے لیے کھیلنے کے مواقع پیدا کرے گا بلکہ انہیں معیاری کھیل کی سہولیات کے ساتھ ساتھ بین الاقوامی معیار کی رہائش اور بورڈنگ بھی فراہم کرے گا تاکہ وہ اپنی بہترین پرفارمنس پیش کرسکیں۔ ہم چاہتے ہیں کہ ہمارا ڈومیسٹک نظام مضبوط اور قابل قدر ہو ۔

ٹورنامنٹ کے شیڈول ، سکواڈز اور میچ آفیشلز کی تقرری ایونٹس کے مطابق کی جائے گی۔شیڈول میچز(نوٹ: اتھارٹی مقررہ شیڈول میں تبدیلی کر سکتی ہے)، فرسٹ الیون میں نیشنل ٹی 20 (چھ ٹیمیں ، 33 میچز) 25 ستمبر تا 13 اکتوبر، قائداعظم ٹرافی (چھ ٹیمیں ، 31 میچز) 20 اکتوبر-29 دسمبر،

پاکستان کپ (چھ ٹیمیں ، 33 میچز) 25 فروری تا 30 مارچ 2022۔ سکینڈ الیون میں کرکٹ ایسوسی ایشن ٹی ٹونٹی (چھ ٹیمیں ، 15 میچز) 15-22 ستمبر، کرکٹ ایسوسی ایشن چیمپئن شپ (تین روزہ) (چھ ٹیمیں ، 30 میچز) 28 ستمبر-14 نومبر،

کرکٹ ایسوسی ایشن چیلنج (50 اوورز) (چھ ٹیمیں ، 15 میچز) 19-27 نومبر، پاتھ وے کرکٹ میں نیشنل انڈر 19 تین روزہ چیمپئن شپ اور ایک روزہ کپ (12 ٹیمیں ، 62 میچز) 3 اکتوبر -12 نومبر، نیشنل انڈر 16 کپ (ایک روزہ) (12 ٹیمیں ، 31 میچز) 8-19 مارچ 2022؛ نیشنل انڈر 13 کپ (ایک روزہ) (16 میچ) 8-18 فروری 2022 ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں