Earthquake shakes Mirpur again 21

میرپورمیں زلزلے کے پھر جھٹکے

میرپور(ویب ڈیسک)میرپورمیں زلزلے کے پھر جھٹکے،لوگ کلمہ طیبہ کاوردکرتے ہوئے گھروں،پلازوں،دکانوں اوردفاترسے باہرنکل آئے۔ایک نجی بینک کی عمارت زلزلے میں شدیدمتاثرہونے کی اطلاعات، کئی مکانات کی دیواروں میں بھی دراڑیں پڑگئیں۔شہریوں کامنگلاڈیم کاازسرنوجیالوجیکل سروے کروانے کا مطالبہ واپڈا،متعلقہ ماہرین کے مطابق ایریامیں زلزلے1896سے آرہے ہیں جبکہ گزشتہ سال اوراس سال آنے والے زلزلے اور جھٹکے منگلا ڈیم کی وجہ نہیں بلکہ جہلم فالٹ لائن اور ہانگ کینال فالٹ لائن ایکٹیوہونے کا نتیجہ میں تفصیلات کے مطابق منگلا ڈیم کنارے آبادمتاثرین منگلاڈیم کے شہراورگردونواح کے علاقے جمعرار کے دن گیارہ بجے کے بعد15منٹ کے دوران زلزلے کے دومرتبہ جھٹکوں نے ایک بارپھرعوام کو پریشانی میں مبتلاکردیا ،اس موقع پرخبروں میں بات چیت کرتے ہوئے متعددوکلاء اورسائلین نے اپنے تحفظات کا اظہارکرتے ہوئے مطالبہ کیاکہ جیالوجیکل سروے ضروری ہےاور واپڈااحکام اورہماری حکومت نے اس طرف توجہ نہیں کی حالانکہ اس زلزلے میں اربوں روپے کی جائیدادوں کامیرپورضلع میں نقصان ہواہےاورمتاثرین کوخدشات ہیں کہ یہ زلزلے منگلا ڈیم اب ریزنگ کے بعدڈیم میں 1212فٹ پانی بھرنے سے دباؤبڑھنے کے باعث آرہے ہیں دوسری طرف خبروں نے واپڈاکے متعلقہ شعبہ سے رابطہ کرنے پرجورپوٹس ریکارڈکی پڑتال کے دوران سامنے آئی ہیں ان کے مطابق انکشاف ہواہے کہ منگلاڈیم کی تعمیرسے قبل اس علاقے میں قبل از بھی زلزلہ آچکاہے اور انٹرنیشنل کمیشن آن لارج کی گائیڈلائنزکے مطابق بھی واٹر کالم کی مائیٹ زیادہ ہونے سے ڈیم کی وجہ سے زلزلے آسکتے ہیں واپڈاذرائع نے خبریں کو بتایاکہ منگلاڈیم کی واٹرکالم ہائیٹ 56میٹرہے جس کے پیش نظرڈیمزسے متعلقہ ماہرین کی رپوٹوں کے مطابق میرپورمیں آنیوالے زلزلے اور جھٹکوں کی وجہ منگلا ڈیم میں جمع پانی نہیں  بلکہ ہانگ کینال فالٹ اورجہلم فالٹ لائن کا ایکٹیوہونے کا نتیجہ ہی معلوم ہوتی ہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں