Pm Azad Kashmir 15

قرارداد الحاق پاکستان کسی جماعت کی جنرل کونسل کا اجتماع نہیں تھا

 کشمیری عوام کی خواہش تھی: وزیراعظم آزادجموں و کشمیر

اسلام آباد ،  (ویب ڈیسک): وزیراعظم آزادجموں و کشمیر راجہ فاروق حیدر نے  کہا  ہے کہ 19 جولائی کا دن انقلاب آفرین دن ہے، قرارداد الحاق پاکستان کے پیچھے کشمیری عوام کی منشاء تھی ،قرارداد الحاق پاکستان کسی جماعت کی جنرل کونسل کا اجتماع نہیں تھا بلکہ یہ کشمیری عوام کی خواہش تھی۔

یوم الحاق پاکستان پر اپنے  پیغام  میں  وزیراعظم آزادجموں و کشمیر راجہ فاروق حیدر  نے  کہا کہ  قرارداد الحاق پاکستان کے تناظر میں تحریک آزادی کا آغاز ہوا ،مقبوضہ کشمیر میں تحریک آزادی کی بنیاد 19 جولائی کی قرارداد الحاق  پاکستان ہے ،قرارداد الحاق پاکستان نے ہی کشمیریوں کیلیے راستہ متعین کیا ۔

راجہ فاروق حیدر نے  کہا کہ ہندوستان کشمیریت کو ختم کرنے کے درپے ہے، جموں اور لداخ والے اپنے کشمیری تشخص کو برقرار رکھیں ، ریاست جموں و کشمیر ایک اکائی ہے۔انہوں نے  کہا کہ سٹیٹ سبجیکٹ کا قانون مہاراجہ ہری سنگھ نے بنایا تھا ، ہم سٹیٹ سبجیکٹ کے قانون پر قائم ہیں ، جموں کے کشمیری سٹیٹ سبجیکٹ کے قانون کی حفاظت کریں ۔

وزیراعظم آزادجموں و کشمیر نے  کہا کہ  ریاست جموں و کشمیر کے مسلمانوں ،سکھوں ،ہندوں اور بدھوں کا سفر ایک ہے ،ہندوستان نے کشمیریوں سے حق خودارادیت کا جو وعدہ کر رکھا ہے وہ اسے پورا کرے ۔ راجہ فاروق حیدر نے  کہا کہ میرا ووٹ پاکستان کیلیے ہے،مجھے پاکستان سے اپنے قلبی تعلق پر کوئی شرمندگی نہیں ہے۔

 وزیراعظم آزادجموں و کشمیر راجہ فاروق حیدر نے  کہا کہ برصغیر میں مسئلہ کشمیر حل ہونے سے امن آئے گا ،مسئلہ کشمیر حل ہونے سے ہی یہ خطہ ترقی کریگا ،ہندوستان غربت کے خاتمے پر توجہ دے وہ دفاع پر کثیر سرمایہ خرچ کر رہا ہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں